مساجد میں نماز باجماعت ہوگی ، علما

علمائے کرام نے اعلان کیا ہے کہ مساجد میں نماز جمعہ اور دیگر نمازیں باجماعت ادا کی جاتی رہیں گی۔

گورنر ہاوس کراچی میں خصوصی اجلاس کے دوران فیصلہ کیا گیا کہ مساجد میں باجماعت نماز جاری رہے گی۔ متفقہ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ عوام وضو گھر پر کريں، سنتيں بھی گھر پر ادا کريں۔ بیمار اور 50 سال سے زائد عمر کے شہری مساجد نہ آئیں ، بچوں کو بھی نہ لایا جائے ، مساجد میں سینیٹائزرز لگائے  جائیں۔

مفتی منیب الرحمان نے بتایا کہ نماز جمعہ کا خطبہ مختصر ہوگا اور لوگ نماز پڑھتے ہی گھر چلے جائیں گے، مفتی اعظم پاکستان مفتی تقی عثمانی نے کہا کہ کورونا وائرس کا مسئلہ اہمیت اختیار کرگیا ہے لیکن کوئی بھی بیماری اللہ کی مصلحت کے بغیر نہیں لگتی، انفرادی اور اجتماعی غلطیوں کی اللہ سے معافی مانگی جائے۔

دوسری طرف جامعۃ الازہر مصر کے علما کی سپریم کونسل نے فتوے میں کہا ہے کہ کورونا وائرس تیزی سے پھیلتا ہے ، زندگی بچانا اسلامی قوانین کے عظیم مقاصد میں سے ایک ہے، انسانی زندگی بچانے کیلئے مسلمان ملک میں حکومت کو باجماعت نماز اور نماز جمعہ پر پابندی لگانے کی اجازت ہے۔ یاد رہے کہ ٰ صدر عارف علوی نے مصر کے سفیر کے ذریعے شیخ الجامعہ سے رہنمائی کی درخواست کی تھی، اس کے بعد یہ فتویٰ جاری کیا گیا ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو