تعمیراتی سرگرمیاں بحال، لاک ڈاؤن نرم

ملک بھر میں تعمیراتی سرگرمیاں دوبارہ شروع ہوگئیں، مختلف صوبوں میں مخصوص دکانوں کو ایس او پیز پر عمل کرنے کی شرط کے ساتھ کھولنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

پنجاب میں زندگی کا پہیہ چل پڑا ہے، مزدور اور مستریوں کو کام مل گیا، کیمیکل ،سافٹ ویئر ڈویلپمنٹ، پروگرامنگ کمپنیوں، کال سینٹرز، ای کامرس بزنس اور لوکل ڈلیوریز کمپنیوں کو 50 فیصد عملے کے ساتھ کام کی اجازت دی گئی ہے۔

پرچون اسٹورز، گوشت، سبزی اور پھل کی دکانیں، بیکریز ، تندور ، آٹا چکی ، ڈیری شاپس ، فوٹو کاپی ،رنگ ساز، الیکٹریشن  ،پلمبر  ، کارپینٹر ، درزی، آٹو ورکشاپس ،ٹائر پنکچرز ،اسپیئر پارٹس، پیٹرول پمپس اور آئل ڈپو صبح 9 سے شام 5 بجے تک کھلے رکھے جاسکتے ہیں ، پوسٹل کوریئر سروسز ، پک اینڈ ڈراپس سروس ، ریسٹورنٹس سے کھانا لے جانے اور ہوم ڈلیوری کی بھی اجازت ہوگی۔

کاروباری افراد کو کم سے کم عملے کے ساتھ کام کی ہدایت کی گئی ہے، سماجی فاصلہ یقینی بنانا لازمی قرار دیا گیا ہے اور کہا گیا ہے کہ دفاتر اور دکانوں پر ماسک اور سینیٹائزر کی موجودگی یقینی بنائی جائے۔

ٹرینڈنگ

مینو