ایک اور مریض صحت یاب، جلد ڈسچارج ہونے کا امکان

سندھ میں کورونا وائرس کے 15 کیسز سامنے آچکے ہیں اور وزیراعلی مراد علی شاہ نے عوام سے پرسکون رہنے اور احتیاطبی تدابیر اختیار کرنے کی اپیل کی ہے۔  

وزیراعلی کی زیر صدارت کورونا ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا۔ اس دوران کورونا وائرس کا پھیلاو روکنے کیلئے اقدامات پر غور کیا گیا البتہ عوامی اجتماعات پر پابندی اور اسکولوں کی تعطیلات میں اضافے کا فیصلہ نہیں کیا گیا یعنی اب اسکول 16 مارچ کو کھلیں گے۔ شرکا کو بتایا گیا کہ کورونا کے 14 مریض مختلف اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں ، تمام مریضوں کی صحت بہتر ہورہی ہے، 2 مشتبہ مریضوں کے سیمپل لیبارٹری بھجوا دیئے گئے ہیں ، ایک مریض کو اسپتال سے گھر جانے کی اجازت دی جاچکی ہے اور امید ہے دوسرے کو بدھ تک ڈسچارج کردیا جائے گا۔

وزیراعلی مراد علی شاہ نے وائرس کنٹرول کرنے کیلئے کوششیں تیز کرنے کا حکم دیا ، ان کا کہنا تھاکہ سندھ میں لوگوں کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں، اللہ کے کرم سے صورتحال کنٹرول میں ہے، انھوں نے عوام سے بچاو کیلئے احتیاطی تدابیر پر عمل کرنے کی اپیل کی۔

ٹرینڈنگ

مینو