لاک ڈاؤن میں بتدریج نرمی ہوگی، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان میں کورونا کیسز توقع سے کم ہیں اور بہت سے ممالک سے صورتحال بہتر ہے۔ کورونا وبا کب تک چلے گی کسی کو معلوم نہیں ہے۔

اسلام آباد میں کورونا کی صورتحال پر اظہار خیال کرتے ہوئے عمران خان نے بتایا کہ انھیں معلوم تھا کہ لاک ڈاؤن سے مزدور طبقہ متاثر ہوگا، سندھ کو احساس پروگرام سے زیادہ پیسے گئے ، 66 لاکھ خاندانوں تک رقم پہنچ چکی ہے۔ اب تک 81 ارب روپے خرچ کئے جاچکے ہیں۔ وزیراعظم ریلیف فنڈ کورونا سے بے روزگار افراد کیلئے ہے، لوگوں کو اپنی بے روزگاری کا ثبوت دینا ہوگا ، ٹائیگر فورس ہر یونین کونسل تک جا کر لوگوں کو رجسٹر کرے گی۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ مساجد میں جانا ہے تو سماجی فاصلہ رکھیں، اگر آپ ایسا نہیں کریں گے تو پوری قوم کو نقصان ہوگا۔

عمران خان نے بتایا کہ حکومت لاک ڈاون اور کورونا کی صورتحال کا جائزہ لے رہی ہے اور انشا اللہ پاکستان سب سے بہترین طریقے کے ساتھ اس مسئلے سے نمٹے گا۔ صورتحال کے مطابق لاک ڈاون میں نرمی کی جاتی رہے گی۔

ٹرینڈنگ

مینو