لاک ڈاؤن میں نرمی کریں گے، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ انھوں نے شوکت خانم اسپتال کیلئے بچوں پر مشتمل ٹائیگر فورس بنائی تھی، اب یہ اسپتال کینسر کے 75 فیصد مریضوں کا مفت علاج کررہاہے۔

ٹائیگر فورس کے رضاکاروں سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ اب لاک ڈاون آہستہ آہستہ ختم کیا جائے گا، اگر لوگوں نے لاک ڈاؤن کھولنے کیلئے دی گئی شرائط پر عمل نہ کیا تو کورونا وائرس پھر پھیلنے لگے گا اور دوبارہ لاک ڈاؤن کرنا پڑے گا۔ عمران خان نے رضاکاروں سے کہا کہ وہ لوگوں کو ایس او پیز سے آگاہ کریں، اگر ایس او پیز پر عمل کرلیا گیا تو معشیت بھی چل جائے گی اور کورونا بھی نہیں پھیلے گا، رضا کار انتظامیہ کے ساتھ مل کر کام کریں گے، بے روزگار افراد کی رجسٹریشن کرائیں گے اور ذخیرہ اندوزی دیکھنے پر انتظامیہ کو آگاہ کریں گے۔ انھوں نے انتظامیہ سے کہا کہ ٹائیگر فورس آپ کی مدد کیلئے بنائی گئی ہے اور آپ نے اسے اپنے ساتھ لے کر چلنا ہے۔

اس سے پہلے پی ٹی آئی کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس ہوا جس میں ملک بھر سے تحریک انصاف کے ارکان قومی و صوبائی اسمبلی ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے، عمران خان نے رہنماوں کو ہدایت کی کہ اپنے اپنے علاقوں میں ٹائیگرز فورس کو متحرک کیا جائے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ کورونا وبا قابو میں ہے اور بہت جلد اس پر مکمل قابو پالیا جائے گا، یہ عوامی نمائندوں کیلئے عوام کی خدمت کا بہترین موقع ہے ، اس وقت اختلافات بھلا کر قوم کی خدمت کی جائے۔ ارکان اسمبلی مساجد میں ایس او پیز پر عملدرآمد کرانے میں بھی کردار ادا کریں۔

ٹرینڈنگ

مینو