لاک ڈاؤن یا لاکھوں ڈاؤن، فیصلہ حکومت پر

عدنان اطہر

ڈی جی ہیلتھ بلوچستان ڈاکٹر سلیم ابڑو نے خبردار کیا ہے کہ اگر لاک ڈاؤن پر سختی سے عملدرآمد نہ کیا گیا تو 11 جولائی تک صوبے میں 18 لاکھ افراد کورونا سے متاثر ہوجائیں گے۔

کوئٹہ میں پریس کانفرنس کے دوران ڈاکٹر سلیم ابڑو نے بتایا کہ وزیراعلی نے اسپتالوں کو فعال رکھنے کیلئے فنڈز دیئے ہیں ، صوبے میں تقریبا روزانہ 800 ٹیسٹ کئے جارہے ہیں، این ڈی ایم سے مزید 5 ٹیسٹ مشینیں ملنے کے بعد یہ تعداد ڈھائی ہزار ہوجائے گی۔

ڈی جی ہیلتھ نے صوبے میں 15 سے 20 دن کرفیو لگانے کی تجویز دی اور بتایا کہ اگر لاک ڈاؤن پر سختی سے عمل نہ کیا گیا تو 3 جولائی تک صوبے میں 3 لاکھ افراد کورونا سے متاثر ہوجائیں گے ، 11 جولائی تک 8 دن میں یہ تعداد 18 لاکھ ہوجائے گی۔ وسط ستمبر تک کل آبادی کا 79 فیصد یعنی 95 لاکھ افراد کورونا مریض ہوں گے۔

سلیم ابڑو نے حکومت سے اپیل کی کہ عید سے پہلے لوگوں کے سفر پر پابندی لگائی جائے اور خبردار کیا کہ اگر ایسا نہ ہوا تو حالات بدتر ہوسکتے ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو