تفتان: ایران سے آنے والوں کے ٹیسٹ

پاکستان میں داخلے کیلئے ہیلتھ ڈیکلریشن لازمی قرار دے دی گئی جبکہ تفتان میں قائم قرنطینہ میں ایران سے واپس آنے والے افراد کے ٹیسٹ کئے جارہے ہیں۔

سول ایوی ایشن حکام نے بتایا کہ کورونا وائرس سے بچاو کیلئے تمام ہوائی اڈوں پر مناسب اقدامات کئے گئے ہیں ، بیرون ملک سے آنے والے ہر مسافر سے ہیلتھ ڈیکلیریشن فارم بھروایا جارہا ہے۔

ہیلتھ ڈیکلریشن فارم میں مسافروں سے پوچھا گیا ہے کہ کیا وہ گزشتہ 14 روز میں چین گئے تھے ؟ مسافروں کو یہ بھی بتانا ہوگا کہ انھیں بخار ، کھانسی یا سانس لینے میں دشواری تو پیش نہیں آرہی۔ لینڈنگ سے پہلے پائلٹ جہازوں میں موجود افراد کو ہیلتھ ڈیکلریشن فارم بھرنے سے متعلق بار بار آگاہ کریں گے۔ سیکریٹری ایوی ایشن کی ہدایت کے مطابق اب ہیلتھ ڈیکلریشن فارم جمع نہ کرانے پر ایئرلائنز کے خلاف کارروائی ہوگی۔

ایئرپورٹس ہی نہیں زمینی راستوں پر بھی خصوصی انتظامات کئے گئے ہیں، پاک افغان سرحد بند ہے، تفتان میں قائم آئسو لیشن سینٹر میں ایران سے آئے افراد کے ٹیسٹ کئے جارہے ہیں،تفتان آنے والوں کو 14 دن پاکستان ہاوس میں قیام کرنا ہوگا۔

ایرانی سرحد پر واقع پاکستانی علاقوں میں ایمرجنسی نافذ ہے اور کسی بھی صورتحال سے نمٹنے کیلئے سرحدی علاقوں میں ڈاکٹرز بھی تعینات کردیئے گئے ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو