مکمل لاک ڈاؤن ناگزیر، ڈاکٹروں کے مطالبات

پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن نے کراچی کے معروف ڈاکٹروں کے موقف کی تائید کرتے ہوئے اگلے 4 ہفتے اہم قرار دے دیئے ، عہدیداروں نے کورونا وبا پر کنٹرول کیلئے سعودی عرب جیسے اقدامات کی تجویز دیدی ہے۔

پی ایم اے کے صدر اشرف نظامی اور دیگر عہدیداروں نے لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران بتایا کہ کورونا لاعلاج ہے، صرف احتیاط سے ہی بچا جاسکتا ہے۔ مریضوں کی تعداد ہزاروں میں نہیں زیادہ ہے۔ ٹیسٹنگ کا عمل بڑھے گا تو مزید کیسز سامنے آئیں گے، خدا نہ کرے وہ وقت آئے کہ ڈاکٹروں کو سڑکوں پر علاج کرنا پڑے ، عہدیداروں نے حکومت سے اپیل کی کہ خدارا ملک کو یورپ جیسی صورتحال کی طرف نہ دھکیلا جائے ، سعودی عرب اور ترکی جیسے اقدامات کئے جائیں۔

طبی ماہرین نے موثر لاک ڈاؤن کا مطالبہ کیا اور بتایا کہ بروقت فیصلے نہ کئے گئے تو امریکا اور یورپی ممالک جیسا حال ہوگا۔

ایسوسی ایشن کے عہدیداروں نے مساجد میں نماز اور تروایح کے فیصلے پر نظر ثانی کا مطالبہ کیا اور چیف جسٹس سے معاملے کا نوٹس لینے کی اپیل کی، طبی ماہرین نے کہا کہ ایسے فیصلے نہیں کرنے چاہئیں جن پر پچھتانا پڑے۔ اگر خانہ کعبہ اور مسجد نبوی کیلئے کوئی اصول اپنائے گئے ہیں تو ان کا یہاں بھی اطلاق ہونا چاہئے۔ زندگی رہے گی تو زندگی کا کارخانہ چلے گا۔

ٹرینڈنگ

مینو