ڈاکٹروں کی تفتان میں تعیناتی

ایران میں کورونا وائرس سے 6 اموات کے بعد بلوچستان حکومت نے سرحدی اضلاع میں ایمرجنسی نافذ کردی ، ڈاکٹروں کی ٹیمیں تفتان اور دیگر علاقوں میں تعینات کردی گئی ہیں۔

بلوچستان حکومت نے ایمرجنسی لگانے کی تصدیق کردی ہے ، محکمہ صحت کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ یہ اقدام وزیراعلی جام کمال کی ہدایت پر اٹھایا گیا ، کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے احتیاطی تدابیر اختیار کرلی گئی ہیں، ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے کنٹرول روم اور تفتان میں ایمرجنسی سینٹر بنادیا گیا ہے۔

وزیراعلی بلوچستان نے بھی ٹویٹ میں بتایا کہ انھوں نے وزیراعظم عمران خان سے رابطہ کیا ہے ، متعلقہ حکام کو احتیاطی تدابیر کی ہدایت بھی کردی گئی ہے۔

جام کمال نے ضروری اقدامات کے بعد عوام کیلئے بھی ٹویٹ کی اور کورونا وائرس کی علامت کے بارے میں بتایا۔

ذرائع کے مطابق تفتان بارڈر پر 9 ڈاکٹر تعینات ہیں اور انھیں تھرمل گن کی سہولت بھی حاصل ہے، یہ ٹیم ایران سے آنے والے زائرین اور دیگر مسافروں کی اسکریننگ کرے گی۔ پاکستان اور ایران کے درمیان دیگر راستوں پر بھی ایسے ہی حفاظتی انتظامات کئے گئے ہیں، اسلام آباد سے این آئی ایچ کی ٹیمیں تفتان میں طبی عملے کی تربیت کریں گی۔ محکمہ صحت نے 100خیمے اور بیڈ تفتان پہنچا دیئے ہیں ، تفتان اور دالبندین میں کورونا آئسولیشن وارڈز قائم کئے گئے ہیں جبکہ چمن میں بھی اسکریننگ کی جارہی ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو