پنجاب حکومت سے 10 روز میں جواب طلب

لاہور ہائی کورٹ نے نون لیگی رہنما اور سابق وزیرخزانہ اسحاق ڈار کا گھر پناہ گاہ میں بدلنے کے خلاف حکم امتناع جاری کردیا.

جسٹس شاہد بلال حسن نے اسحاق ڈار کی اہلیہ تبسم ڈار کی درخواست کی سماعت کی، تبسم ڈار نے موقف اختیار کیا تھا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے رہائش گاہ کی نیلامی کے خلاف حکم امتناع جاری کررکھا ہے، پنجاب حکومت نے گھر کو غیر قانونی طور پر پناہ گاہ میں تبدیل کیا۔

درخواست میں کہا گیا کہ پنجاب حکومت نے ہائیکورٹ کے حکم کی بھی خلاف ورزی کی ہے۔

عدالت نے درخواست پر صوبائی حکومت سے 10 روز میں جواب طلب کرلیا اور اسحاق ڈار کے گھرکو پناہ گاہ میں تبدیل کرنے کے خلاف حکم امتناع جاری کردیا۔

ٹرینڈنگ

مینو