بجلی اور گیس کی قیمت کم کرنے کا عزم

وزیراعظم عمران خان نے بجلی اور گیس کی قیمتیں مزید نہ بڑھانے کا اعلان کیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ کسی نہ کسی طرح بجلی کی قیمتیں کم کریں گے، اس سلسلے میں بجلی بنانے والی کمپنیوں سے بھی بات کی جائے گی۔

ضلع مہمند میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے بتایا کہ ماضی کی حکومت نے بجلی کمپنیوں سے 20 اور 30 سال کے معاہدے کئے ، مہنگی بجلی بنانے والے پاور اسٹیشن بند کئے جائیں۔ انڈسٹری کو سستی بجلی دیں تو خسارہ بڑھ جاتا ہے، سابقہ حکومت نے مہنگی گیس درآمد کرنے کا معاہدہ کیا ، حکومت ماضی کے مہنگے معاہدوں کو توڑ بھی نہیں سکتی۔

عمران خان نے نام لئے بغیر کہا کہ سارے کا سارا خاندان بیرون ملک بیٹھا ہے ، انسان چوری نہ کرے تو اسے لندن بھاگنے کی ضرورت نہیں پڑتی۔ حکمران کرپٹ ہوں تو کوئی ملک ترقی نہیں کرسکتا، ملک غریب تب ہوتے ہیں جب حکمران دولت لوٹ کر بیرون ملک لے جائیں ، قوم کبھی اس پارٹی کو ووٹ نہ دے جس کے رہنما کے ملک سے محلات ہوں۔ وزیراعظم نے مہمند کے عوام کو مہمند ڈیم سے پانی فراہم کرنے کا عزم ظاہر کیا اور بتایا کہ  یہاں انڈسٹریل اسٹیٹ ہوگی ، کوشش کروں گا تجارت کیلئے بارڈر بھی کھل جائے۔ علاقے میں کفالت پروگرام 2 ہزار روپے ماہانہ سے شروع کیا جارہا ہے ، مستحق طلبہ کو 50 ہزار اسکالر شپ دیں گے اور مہمند کے ڈھائی ہزار نوجوانوں نے اسکالر شپ کیلئے درخواست دی ہے جنہیں پہلے موقع دیا جائے گا۔

وزیراعظم نے دہلی فسادات کی مذمت کرتے ہوئے بتایا کہ ابھی مسلمانوں پر ظلم کیا گیا آخر میں یہ ظلم سکھوں اور مسیحی برادری پر بھی ہوگا، پوری قوم کشمیری بھائیوں کے ساتھ ہے ، 80 لاکھ کشمیری 7 ماہ سے نظر بند ہیں، انتہا پسند مودی اور آر ایس ایس کا نظریہ نفرت کا نظریہ ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو