کراچی:گلیاں سیل ہوں گی یوسیز نہیں

سندھ حکومت نے 11 یونین کونسلز کو  سیل نہ کرنے کا فیصلہ کرلیا،اب صرف ان گلیوں کو سیل کیا جائے گا جہاں کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

سندھ حکومت نے کورونا وبا کو پھیلنے سے روکنے کیلئے پہلے 11 یو سیز کو سیل کرنے کا حکم دیا اور بعد میں فیصلہ واپس لے لیا، صوبائی وزیراطلاعات ناصر حسین شاہ نے حکام کو ہدایت کی ہے کہ جو گلیاں متاثرہ ہیں صرف انھیں سیل کیا جائے۔ ناصر حسین شاہ کا کہنا تھا کہ یونین کونسل سیل کرنے سے عوام کو مسائل کا سامنا کرنا پڑے گا۔ اس سے پہلے حکومت نے گیلانی ریلویز ، ڈالمیا ، جمالی کالونی ، گلشن بلاک 2 ، پہلوان گوٹھ ، گلزار ہجری ، صفورہ ، فیصل کینٹ ، منظور کالونی ، جیکب لائن اور جمشید کوارٹرز میں یوسیز کو سیل کرنے کا حکم دیا تھا۔

سندھ میں کورونا کیسز کی شرح خطرناک حد تک بڑھ گئی ہے ، وزیراعلی مراد علی شاہ نے بتایا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران دنیا کی اوسط شرح سے زیادہ کورونا کیسز سندھ میں رپورٹ ہوئے ہیں، 531 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے اور 104 یعنی 20 فیصد مثبت آئے۔ محکمہ صحت کے مطابق صوبے میں کورونا ٹیسٹ کے بعد سامنے آنے والے 82 فیصد مریضوں کا تعلق کراچی سے ہے ، اس کے بعد حیدرآباد ، لاڑکانہ اور پھر سانگڑھ کا نمبر آتا ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو