کراچی پولیس پر حملہ، خطیب گرفتار

کراچی میں کورونا وائرس سے بچاو کیلئے مساجد میں 5 افراد کو نماز جمعہ پڑھنے کی اجازت دی گئی تھی ، لیاقت آباد نمبر 7 کی مسجد میں خلاف ورزی پر پولیس پہنچی تو خطیب کے اشتعال دلانے پر لوگوں نے اہلکارؤں پر حملہ کردیا۔

مشتعل افراد نے نماز جمعہ سے منع کرنے پرپتھراو کیا اور اہلکارؤں کو تشدد کا نشانہ بنایا۔

پولیس نے لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی اور اہلکاروں پر حملے کے الزام میں خطیب سمیت 4 افراد کو گرفتار کرلیا ہے۔

سندھ حکومت اور علما کرائے نے متفقہ فیصلہ کیا تھا کہ مساجد میں 5 افراد نماز جمعہ ادا کریں گے ، علما نے لوگوں سے گھروں پر نماز ادا کرنے کی بھی اپیل کی تھی۔

شہریوں سے کہا گیا تھا کہ دوپہر 12 بجے سے 3 بجے تک گھروں میں رہیں ، اس دوران تمام دکانیں بھی بند رکھنے کا حکم دیا گیا تھا، حکومت نے لاک ڈاؤن میں توسیع کی تھی جس کے تحت پابندیوں کا اطلاق 14 اپریل تک رہے گا۔

14 اپریل تک نماز جنازہ اور تدفین کے علاوہ تمام اجتماعات پر پابندی ہے ، تدفین میں صرف رشتے دار شرکت کرسکیں گے اور اس کیلئے بھی ایس ایچ او کو اطلاع دینی ہوگی۔ مقررہ وقت میں مخصوص کاروبار کیا جاسکے گا۔

ٹرینڈنگ

مینو