برطانیہ میں پاکستانی نرس کا انتقال

دنیا بھر میں کورونا سے ہلاک افراد کی تعداد 58 ہزار 6 سو سے زائد اور مریض 11 لاکھ کے قریب پہنچ گئے، اٹلی میں مزید 766 ، اسپین 661 ، جرمنی 168 ، فرانس 1120، ایران 134 ، برطانیہ 684 ، بیلجئم 132، نیدرلینڈز 148 ، کینیڈا 35 ، سعودی عرب 4 اور عرب امارات میں مزید ایک شہری کا انتقال ہوا ہے۔

برطانیہ میں اموات چین سے زیادہ ہوگئیں۔ 3 ہزار 6 سو سے زائد ہلاکتیں ہوچکی ہیں اور کیسز 38 ہزار سے بڑھ گئے ہیں، کورونا سے جاں بحق 13 برس کے اسماعیل محمد عبدالوہاب کو لندن میں سپرد خاک کردیا گیا ، ان کی والدہ اور 6 دیگر اہلخانہ نے سفر آخرت آن لائن دیکھا ، یہ تمام افراد قرنطینہ میں ہیں۔

کورونا وائرس سے پاکستانی نژاد برطانوی نرس اریما نسرین بھی جاں بحق ہوگئی ہیں، ان کا انتقال والسال مینر اسپتال میں ہوا وہ اسی طبی مرکز میں 16 برس سے خدمات انجام دے رہی تھیں، اریما 3 بچوں کی ماں تھی اور ان کی کزن کزیمہ نسرین نے لوگوں سے پبلک مقامات پر بلا ضرورت نہ جانے کی اپیل کی ہے۔

اٹلی میں اموات کی تعداد 14 ہزار 7 سو کے قریب پہنچ گئی ہے، ایک  لاکھ 20 ہزار افراد متاثر ہوئے ہیں اور 4 ہزار سے زائد کی حالت انتہائی تشویشناک ہے۔ اسپین میں 11 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں ، یہاں ایک لاکھ 17 ہزار مریضوں میں سے ساڑھے 6 ہزار زندگی اور موت کی کشمکش میں ہیں۔

کورونا نے فرانس میں 24 گھنٹے کے اندر 11 سو سے زائد زندگیاں نگل لی ہیں ، ہلاک افراد کی تعداد ساڑھے 6 ہزار سے زائد ہوچکی ہے اور 50 ہزار افراد اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔ جرمنی میں لگ بھگ 13 سو اور بیلجئم میں ساڑھے 11 سو افراد زندگیوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں جبکہ نیدرلینڈز میں تعداد 15 سو کے قریب ہے۔

کینیڈا میں اموات 2سو سے زائد ہیں لیکن انٹاریو میں محکمہ صحت کے حکام نے بڑا خدشہ ظاہر کردیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ سخت اقدامات کے باوجود صوبے میں 15 ہزار افراد ہلاک ہوسکتے ہیں، اپریل میں 16 سو اموات اور 80 ہزار افراد کے متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔

ایران میں 3 ہزار 3 سو افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔ 53 ہزار افراد متاثر ہوئے ہیں اور اب بھی 4 ہزار افراد کی تعداد تشویشناک ہے۔ سعودی عرب میں 25 اموات ہوچکی ہیں اور 2 ہزار سے زائد مریض زیرعلاج ہیں۔ متحدہ عرب امارات میں 9 افراد کا انتقال ہوا ہے اور 1264 افراد متاثر ہوئے ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو