دنیا سے قرض معاف کرنے کا مطالبہ

وزیراعظم عمران خان نے کورونا وائرس کے باعث عالمی برادری سے پاکستان سمیت غریب ممالک کے قرض معاف کرنےکا مطالبہ کردیا۔

امریکی خبرایجنسی سے گفتگو میں وزیراعظم نے کہا کہ کورونا وائرس زیادہ پھیلا تو پاکستان اس سے نمٹنے کی صلاحیت نہیں رکھتا ، قرضے معاف ہونے سے وائرس کی روک تھام میں مدد ملے گی، کورونا ترقی پذیر ممالک کی معیشتوں کو تباہ کرسکتا ہے، اس لئے ترقی یافتہ ممالک غریب ملکوں کے قرض معاف کرنے کیلئے تیار رہیں، عمران خان نے ایران پر عائد پابندیاں اٹھانے کا بھی مطالبہ کیا۔

وزیراعظم نے بتایا کہ اگر کورونا سے صورتحال زیادہ خراب ہوگئی تو حکومت کمزور معیشت کو بچا نہیں سکے گی، ملکی برآمدات متاثر ہوں گی اور بیروزگاری بڑھ جائے گی جبکہ آئی ایم ایف کا قرض بھی بوجھ بن جائے گا۔

عمران خان نے بتایا کہ پاکستان کے پاس کسی بڑے بحران سے نمٹنے کیلئے علاج معالجے کی سہولتیں نہیں ہیں۔

وزیراعظم نے افغان صدر کے طالبان سے متعلق بیان کو مایوس کن قرار دیا اور کہا کہ  افغان امن عمل میں پاکستانی کوششوں کی تعریف کی جانی چاہئے۔

ٹرینڈنگ

مینو