برطانیہ : مسلمانوں کی میتیں جلیں گی؟

برطانوی حکومت نے کورونا کا پھیلاو روکنے کیلئے اقدامات سے متعلق قانون سازی کی تیاری کرلی ہے، ہلاک افراد کی لاشیں ٹھکانے  لگانے کے طریقہ کار سے متعلق فیصلے کا اختیار لوکل کونسل کو دیئے جانے کا امکان ہے ، برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے کہا ہے کہ اگر شہریوں نے خود کو سماجی طور پر تنہا کرلیا تو کورونا پر 12 ہفتے میں کنٹرول کیا جاسکتا ہے۔

بورس جانسن نے شہریوں کو ریسورنٹس اور کیفے میں نہ جانے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ غیر ضروری رابطے ختم کردیں، برطانوی وزیراعظم نے مکمل لاک ڈاون کا امکان مسترد کردیا البتہ یہ بتادیا کہ کریک ڈاؤن ضرور کیا جائے گا۔

انھوں نے بتایا کہ حکومت اینٹی باڈی ٹیسٹ کیلئے لاکھوں کٹس خریدے گی، ان سے یہ پتہ چلے گا کہ کورونا کا شکار کون ہوا اور کس میں مدافعت تھی۔ وزیراعظم نے بتایا کہ کورونا کا ایک برطانوی مریض علاج سے متعلق ٹرائل کا حصہ بن رہا ہے۔

برطانوی حکومت نے وبا کا پھیلاو روکنے کیلئے اقدامات سے متعلق قانون سازی کا فیصلہ کیا ہے ، ٹیسٹ سے انکار کرنے والے کو ایک ہزار پاؤنڈ جرمانہ دینا ہوگا، وزرا اجتماعات پر پابندی لگانے کے مختار ہوں گے ، لوکل کونسل لاشیں کو ٹھکانے لگانے کے طریقہ کار سے متعلق فیصلے کیلئے بااختیار ہوگی۔ برطانوی میڈیا کے مطابق ہنگامی صورتحال سے متعلق یہ قوانین اگلے ہفتے پارلیمنٹ میں پیش کئے جانے کاامکان ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو