101 برس کی عمر میں موت کو دوسری شکست

1919 میں فلو کی وبا کو شکست دینے والے شخص نے 101 برس کی عمر میں کورونا کو بھی پچھاڑ دیا۔

جسے اللہ رکھے اسے کون چکھے، اٹلی میں کورونا سے متاثرہ 101 برس کا شہری صحت یاب ہوکر اسپتال سے گھر منتقل ہوگیا ہے، اسے مقامی افراد مسٹر پی کہتے ہیں اور وہ 1919 میں پیدا ہوئے تھے، یہ وہ وقت تھا جب اسپینش فلو کی وبا پھیلی ہوئی تھی۔ اس وبا سے دنیا بھر میں 5 کروڑ افراد ہلاک ہوئے تھے۔

شمال مشرقی علاقے ریمینی کے رہائشی مسٹر پی کا ایک ہفتے پہلے کورونا ٹیسٹ مثبت آیا تھا اور وہ 8 دن کے اندر صحت یاب ہوگئے ہیں۔

اٹلی میں 86 فیصد اموات 70 برس سے زائد عمر کے افراد کی ہوئی ہیں البتہ مسٹر پی ان چند لوگوں میں سے ایک ہیں جنھوں نے مرض کا حوصلہ مندی سے مقابلہ کیا۔

ٹرینڈنگ

مینو