خیبرپختونخوا: تبلیغی مراکز قرنطینہ کیوں ؟

سندھ اور پنجاب حکومت کے بعد اب خیبرپختونخوا حکومت نے بھی تبلیغی مراکز سے کورونا کا پھیلاو روکنے کیلئے بڑا قدم اٹھالیا ہے۔

خیبرپختونخوا میں کورونا وائرس کے کئی کیسز سامنے آنے کے بعد حکومت نے نوٹی فکیشن جاری کرکے تمام تبلیغی مراکز کو قرنطینہ قرار دے دیا ہے۔ ہدایت نامے میں متعلقہ افسران سے کہا گیا ہے کہ وہ ہر تبلیغی مرکز کے کم از کم 2 افراد کا ٹیسٹ کرائیں۔

اس سے پہلے لاہور کے نواحی علاقے رائے ونڈ میں کورونا وائرس پھیلا تھا ، پنجاب حکومت نے پورا علاقہ سیل کرکے لوگوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایت کی تھی، تبلیغی جماعت نے بھی غیرمعمولی قدم اٹھاتے ہوئے تبلیغ کیلئے نکلی جماعتوں کو واپس بلالیا تھا اور تبلیغی سرگرمیاں روکنے کا اعلان کیا تھا۔

سندھ کے دوسرے بڑے شہر حیدرآباد کی نور مسجد میں بھی کئی افراد کے کورونا ٹیسٹ مثبت آئے تھے ، نور مسجد سندھ میں تبلیغی جماعت کا دوسرا بڑا مرکز ہے۔ اس کے بعد آئی جی مشتاق مہر نے پولیس حکام کو ہدایت کی تھی کہ تبلیغی جماعت کے ارکان کو ان کے مراکز تک محدود رکھا جائے اور تبلیغی مراکز کو قرنطینہ سینٹر قرار دیا جائے۔

ٹرینڈنگ

مینو