نوازشریف نے فوج کے خلاف اعلان جنگ کیا، شیخ رشید

وزیر ریلوے شیخ رشید نے مسلم لیگ نون کی نائب صدر مریم نواز کو آخری بار خبردار کیا ہے کہ وہ ایسی خبریں دے سکتے ہیں جن سے سیاسی زلزلہ آجائے گا۔

لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران انھوں نے نوازشریف کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ دشمن ، منی لانڈرر اور بھگوڑے کو خطاب کا حق نہیں ہونا چاہئے۔ نوازشریف سی پیک کے خلاف لندن میں گٹھ جوڑ کے محرک ہیں۔ وزیراعظم نے نوازشریف کا خطاب نشر کرنے کی اجازت دے کر غلطی کی، نوازشریف نے فوج کے خلاف اعلان جنگ کیا ، اب بیانیے کا نہیں عدالتوں میں صفائی دینے کا وقت ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مریم نواز نے ان پر 4 حملے کئے، وہ ایسے خبریں دے سکتے ہیں جن سے زمین آسمان ہل جائیں، مریم نواز بتائیں ان کے والد شدید بیمار تھے تو اسپتال کیوں نہیں گئے، یہ بارگین کر رہے تھے اس کام میں اور بھی کئی لوگ شامل ہیں۔

شیخ رشید کا کہنا تھا کہ حلفیہ کہتا ہوں ایک سال 10 ماہ خاموشی کی وجہ مسلم دوستوں سے مل کر بارگین کرنا تھا، یہ ایف اے ٹی ایف قوانین میں 34 ترامیم چاہتے تھے ، یہ سب بھارتی ایجنٹ ہیں۔

انھوں نے نوازشریف سے کہا ہے کہ اقتدار سے محرومی کا بدلہ ملک سے نہ لیں، نوازشریف واپس آئیں گے تو جیل جائیں گے، نوازشریف بتائیں مودی سے تنہائی میں کیا باتیں کیں۔

وزیرریلوے کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے راحیل شریف کو خط لکھا اور جمہوریت کیلئے خدمات پر تعریف کی ، اب جنرل راحیل شریف کے خلاف بات کی ہے۔ کوئی لیگی پاک فوج کے خلاف نہیں ہوسکتا، آج انھیں موجودہ عدالتیں بری لگتی ہیں لیکن نسیم حسن شاہ اور جسٹس قیوم کی عدالتیں اچھی لگتی تھیں۔

وزیر ریلوے نے کہاکہ یہ خوفزدہ ہیں کہ مارچ میں پی ٹی آئی سینیٹ میں اکثریت حاصل کرلے گی، اپوزیشن کل کے بجائے آج ہی استعفے دے، حکومت ضمنی الیکشن کرادے گی اور خالی سیٹوں پر الیکشن ہوں گے تو یہ ٹائیں ٹائیں فش ہوجائیں گے۔

ٹرینڈنگ

مینو