مریم نواز اور کیپٹن صفدر کے خلاف مقدمات

نون لیگ کی نائب صدر مریم نواز، ان کے شوہر کیپٹن (ر) صفدر اور دیگر نون لیگی رہنماؤں کے خلاف لاہور اور گوجرانوالہ میں مقدمات درج کئے جانے کا سلسلہ جاری ہے۔

گوجرانوالہ میں پی ڈی ایم کے جلسے میں شرکت کیلئے جانے والے لیگی رہنماوں کے خلاف تھانہ شاہدرہ لاہور میں مقدمہ درج کیا گیا ، اس میں مریم نواز ، کیپٹن صفدر ، کئی لیگی رہنما اور 2 ہزار سے 22 سو نامعلوم افراد نامزد ہیں، ان پر پنجاب ساونڈ ایکٹ، سیکیورٹی ایس او پیز کی خلاف ورزی کا الزام ہے۔

پولیس کی مدعیت میں درج مقدمے کے مطابق رہنماؤں اور کارکنوں نے  شاہدرہ چوک پر بلا اجازت ٹریفک بلاک کی جس سے عوام کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑا، ملزمان نے حکومتی اجازت کے بغیر گاڑی سے باہر آکر خطاب کیا ، اس دوران حکومت اور ریاستی اداروں کے خلاف اشتعال انگیز تقاریر اور نعرے بازی کی گئی۔

اس سے پہلے شاہدرہ پولیس اسٹیشن میں ہی نواز شریف، مریم نواز اور دیگر لیگی رہنماؤں کے خلاف اشتعال انگیز تقاریر اور غداری کا مقدمہ درج کیا جاچکا ہے۔

تھانہ سول لائن گوجرانوالہ میں پی ڈی ایم جلسے کے دوران کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی ، سزا یافتہ افراد کی تقاریر ، سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے ، اسلحہ کی نمائش اور سڑکیں بلاک کرنے پر انتظامیہ کے خلاف 2 مقدمات درج کئے گئے ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو