کراچی: بارش کے بعد حادثات ، 5 اموات،ویڈیو

کراچی میں بارش کے دوران جہاں مختلف علاقوں میں پانی جمع ہوا وہیں حادثات میں بچوں سمیت 5 افراد جاں بحق بھی ہوئے۔

بارش نے کراچی انتظامیہ کے دعووں کی قلعی کھول دی ، شاہراہ فیصل ، شہید ملت روڈ ، صدر ، پرانی سبزی منڈی ، گلشن اقبال ، گلستان جوہر ، صفورہ چورنگی ، پی ای سی ایچ ایس ، سخی حسن ، لیاری  اور پاک کالونی سمیت مختلف علاقے ندی نالوں کا منظر پیش کرتے رہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق سب سے زیادہ بارش گلشن حدید میں 86 ملی میٹر ریکارڈ کی گئی ، گلستان جوہر ، یونیورسٹی روڈ، سرجانی اور جناح ٹرمینل سمیت دیگر علاقوں میں مجموعی طور پر 250 ملی میٹر سے زائد بارشیں ہوئی۔

جگہ جگہ گاڑیاں خراب ہوئیں اور لوگ دھکا لگاتے نظر آئے، گلشن حدید فیز 2 میں 10 برس کا بچہ ارباب کرنٹ لگنے سے جاں بحق ہوا، لانڈھی قذافی ٹاؤن اور گارڈن فوارہ چوک کے قریب گھر میں کرنٹ لگنے سے 2 افراد جان سے گئے۔ اورنگی ساڑھے 11 کے نالے میں گر کر ایک شخص نے دم توڑا جبکہ کورنگی نالے میں بچی گر کر لاپتہ ہوگئی۔ بن قاسم ٹاؤن میں آسمانی بجلی نے شہری کی جان لی۔

لیاقت آباد میں گجر نالہ ابل پڑا اور مکان ڈوب گئے، عوام کہتے ہیں نالوں کی صفائی نہ ہونے کے باعث پانی گھروں میں داخل ہوا اور سامان خراب ہوگیا۔

بارش کے دوران کے الیکٹرک کا سسٹم جواب دے گیا اور 5 سو سے زائد فیڈر ٹرپ کرگئے ، شہر کا 80 فیصد علاقہ بجلی سے محروم رہا۔ اولڈ سٹی ایریا، گلستان جوہر اور فیڈرل بی ایریا سب سے زیادہ متاثر ہوئے۔

ٹرینڈنگ

مینو