7 افراد کی سزا مکمل معاف

امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے مواخذے سے بری ہونے کے بعد سنگین وائٹ کالر جرائم میں ملوث پسندیدہ افراد کو معافیاں بانٹنا شروع کردی ہیں۔

2011 میں کرپشن اسکینڈل میں ملوث ریاست الی نوائے کے سابق ڈیموکریٹ گورنر راڈ بلاگووچ  بھی ان شخصیات میں شامل ہیں جنہیں معافی دیدی گئی۔ بلاگووچ  کو 14 برس کی سزا کا سامنا تھا، انہوں نے سینیٹ کی سیٹ بیچنے کی کوشش کی تھی مگر پکڑے گئے تھے۔

ٹرمپ نے مائیکل ملکن کو بھی خوش کردیا ہے ، انھوں نے 1990 میں انسائیڈ ٹریڈنگ کا اعتراف جرم کیا تھا اور اب وہ بھی کھلے بندوں گھوم سکیں گے۔

جن دیگر اہم افراد کو معافی دی گئی ان میں نیویارک پولیس محکمہ کے کشمنر برنارڈ کیرک بھی شامل ہیں۔

سان فرانسسکو سے تعلق رکھنے والے این ایف ایل کے سابق مالک ایڈورڈ بارٹولو کو بھی معافی دے دی گئی ہے۔

صدر ٹرمپ نے مجموعی طورپر 7 شخصیات کی سزا مکمل معاف کی ہے جبکہ 4 افراد کی سزاؤں میں تخفیف کی گئی ہے۔ یہ واضح نہیں کہ صدر ٹرمپ نے معافی کیلئے کیا معیار اپنایا ہے؟

ٹرینڈنگ

مینو