میکسیکو: 15 ہزار سال قدیم ہاتھیوں کی باقیات

میکسیکو میں 15 ہزار سال پہلے ہلاک کئے گئے ہاتھیوں کی باقیات دریافت کرلی گئیں۔

سانس دانوں نے یہ دریافت نئے فلپ اینجلز انٹرنیشنل ایئرپورٹ کے مقام پر کھدائی کے دوران کی ہے۔

ہاتھیوں کے علاوہ جن جانوروں کی باقیات ملی ہیں ان میں بھینسے ، اونٹ ، گھوڑے اور کتے بھی شامل ہیں۔

اسی علاقے سے قدیم دور کے 15 انسانوں کی کھونپڑیاں بھی ملی ہیں۔ یہاں فوسلز کی نشاندہی 2019 میں ہوئی تھی اور یہ تصاویر پہلی بار سامنے آئی ہیں۔

گزشتہ سال ایئرپورٹ کے قریب 2 گڑھوں کی دریافت کا دعوی کیا گیا تھا جو ممکنہ طور پر ہاتھیوں کا شکار کرنے کیلئے استعمال کئے جاتے تھے۔

حکام نے بتایا کہ باقیات میں سے اکثریت کولمبین ہاتھیوں کی ہے، محققین نے خیال ظاہر کیا ہے کہ ان باقیات میں سے کچھ 35 ہزار سال پرانے جانوروں کی بھی ہوسکتی ہیں۔

امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ اس دور میں یہاں جنگلی حیات کی بہتات ہوگی کیونکہ یہ 4 وادیوں کی گزرگاہ تھی۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ 22 ہزار پونڈ سے زائد وزنی کولمبین ہاتھی 15 فٹ بلند ہوتے تھے ، ان کے دانت 15 فٹ تک لمبے اور عمر تقریبا 65 سال پر محیط ہوتی تھی۔

یہ ہاتھی تقریبا 12 ہزار سال پہلے دنیا سے معدوم ہوچکے ہیں۔ ماہرین نے علاقے سے مزید جانوروں کی باقیات ملنے کا بھی امکان ظاہر کیا ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو