امریکا: کولمبس کا مجسمہ گرادیا گیا، ویڈیو

امریکا میں مجسمے گرانے کی مہم زور پکڑگئی، مظاہرین نے صدر ٹرمپ کی 10 سال جیل سے متعلق وارننگ کو خاطر میں نہ لاتے ہوئے ملک دریافت کرنے والے کرسٹوفر کولمبس کا مجسمہ گرا کر پانی میں بہادیا۔

مظاہرین نے بالٹی مور میں کرسٹوفر کولمبس کے مجسمے کو رسیاں باندھ کر گرایا اور اس کے ٹکڑے پانی میں بہادیئے۔

اطالوی مہم جو کرسٹوفر کولمبس سے متعلق درسی کتابوں میں لکھا ہے کہ انہوں نے نئی دنیا (امریکا) دریافت کی البتہ امریکا میں بہت سے لوگ انھیں قدیم افراد کی نسل کشی کا ذمے دار سمجھتے ہیں۔

اس سے پہلے بوسٹن میں کولمبس کے مجسمے کا سر تن سے جدا کیا گیا تھا، مظاہرین نے میامی میں مجسمے کو نقصان پہنچایا جبکہ ورجینیا میں جھیل میں پھینک دیا تھا، ایسے ہی واقعات کے بعد صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ دنوں ہی یادگاروں اور مجمسوں کا تحفظ کرنے کیلئے ایگزیکٹو آرڈر پر دستخط کئے تھے، انھوں نے کہا تھا کہ مجسموں کو نقصان پہنچانے والے افراد کو 10 سال قید کی سزا دی جائے گی۔

بالٹی مور میں مجمسہ گرائے جانے سے کچھ دیر پہلے ہی صدر ٹرمپ نے یوم آزادی کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے مجسموں اور یادگاروں کو نقصان پہنچانے والے مظاہرین کو دہشت گرد قرار دیا تھا۔  ڈونلڈ ٹرمپ کہا کہ ہم لٹیروں اور انتشار و بنیاد پرستوں کو شکست دینے کے مرحلے میں ہیں، حکومت مشتعل ہجوم کو مجسمے اور یادگاریں گرانے اور تاریخ مٹانے کی اجازت نہیں دے گی ، جن لوگوں نے ملک کو ترقی دی وہ  ویلن نہیں ہیرو تھے تھے۔

یوم آزادی کے موقع پر ملک بھر میں سیاہ فام شہری جارج فلائیڈ کی موت اور نسلی امتیاز کے خلاف احتجاج کیا گیا جبکہ نیویارک سٹی میں ٹرمپ ٹاور کے قریب امریکی پرچم جلائے گئے۔

ٹرینڈنگ

مینو