تنخواہ بڑھی نہ پنشن ، اسکولوں پر اضافی ٹیکس

مناہل تنویر

پی ٹی آئی حکومت نے اپنا تیسرا بجٹ پیش کیا ہے، تبدیلی سرکار نے اس بار سرکاری ملازمین اور طلبا کے والدین کو پریشانی میں مبتلا کردیا ہے۔

حکومت نے وفاقی بجٹ پیش کرکے والدین کی آمدنی پر کلہاڑی چلا دی، اچھے اسکولوں میں بچوں کو پڑھانا مشکل ہوگیا۔

والدین کیلئے پہلے ہی بھاری فیسیں بھرنا مشکل تھا اب حکومت نے رہی سہی کسر بھی پوری کردی، بجٹ میں 2 لاکھ روپے سے زائد سالانہ فیس لینے والے تعلیمی اداروں پر 100 فیصد سے زائد ٹیکس کی تجویز دے دی گئی، خدشہ ہے کہ یہ ادارے کسی نہ کسی بہانے بچوں کے والدین سے رقم بٹوریں گے۔

مہنگائی میں کئی گنا اضافے کے باوجود اس بار ریٹائرڈ افراد کی پنشن اور ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ بھی نہیں کیا گیا، یہی وجہ ہے کہ سرکاری ملازمین اور پنشنرز حکومت سے نالاں ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو