زیادتی کیس: متنازع بیان پر عمر شیخ کی طلبی

محمد عثمان، اسرار خان

پولیس کا طریقہ کار بدلہ نہ رویہ، ملزمان گرفتار نہ ہوسکے تو زیادتی کی شکار خاتون کو ہی ذمے دار قرار دے دیا، سی سی پی او لاہور عمر شیخ کہتے ہیں خاتون رات کو اکیلی موٹر وے پر کیوں گئی ؟ جی ٹی روڈ سے گھر چلی جاتی، اس طرف سے ہی جانا تھا تو کم از کم پٹرول ہی چیک کرلیتی۔ ان کے اس بیان پر سوشل میڈیا صارفین شدید تنقید کر رہے ہیں اور انھیں ہٹانے کا مطالبہ کیا جارہا ہے۔ عمر شیخ نے سوشل میڈیا پر اپنے بیان کی وضاحت بھی دی اور خاتون کے بعد معاشرے کو بھی واقعے کا ذمہ دار ٹھہرا دیا۔

قومی اسمبلی میں قائمہ کمیٹی برائے قانون و انصاف کا اجلاس ریاض فتیانہ کی زیرصدارت ہوا، کمیٹی نے سیکرٹری کمیونیکیشن، آئی جی موٹر وے پولیس اور متنازع بیان پر سی سی او پی لاہور کو بھی آئندہ اجلاس میں طلب کیا۔

کمیٹی کے چیئرمین ریاض فتیانہ نے کہا کہ عمر شیخ آئندہ اجلاس میں اپنے بیان کی وضاحت دیں۔ موٹروے مارچ میں کھولی گئی ، اب تک موٹروے پولیس تعینات کیوں نہیں کی گئی۔ یہ معاملہ انتہائی شرمناک ہے۔ نفیسہ شاہ نے سی سی پی او کے بیان کو خاتون کی تذلیل قرار دیا اور عمر شیخ کے استعفے کا مطالبہ کیا۔

ٹرینڈنگ

مینو