سندھ بجٹ : سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ

سندھ کے بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہیں بڑھانے کا اعلان کردیا گیا ، مالی سال 21-2020 کا لگ بھگ 12 کھرب 40 ارب روپے سے زائد کا بجٹ پیش کئے جانے کے موقع پر اپوزیشن ارکان شدید احتجاج کرتے رہے۔

وزیراعلی مراد علی شاہ نے بجٹ تقریر میں بتایا کہ صحت کے بجٹ میں 16 فیصد اضافہ کیا گیا اور اب یہ رقم 139 اعشاریہ 8 ارب روپے رکھی گئی ہے، کورونا ایمرجنسی فنڈ 3 ارب روپے ہوگا، مراد علی شاہ نے وفاقی حکومت پر تنقید کی جبکہ ان کی تقریر کے دوران اپوزیشن ارکان شور شرابا کرتے رہے۔

بجٹ میں ٹڈی دل کا تدارک کرنے کیلئے 44 کروڑ روپے مختص کئے گئے اور زراعت کے بجٹ میں 15 ارب روپے اضافے کی تجویز پیش کی گئی۔

تعلیم کے بجٹ میں 10 فیصد اضافہ تجویز کیا گیا، یہ رقم اب 244 اعشاریہ 5 ارب روپے ہوگئی ، صوبائی ترقیاتی بجٹ 155 ارب اور ضلعی ترقیاتی بجٹ 15 ارب روپے رکھا گیا۔ بلدیات کیلئے گرانٹ 5 فیصد بڑھائی گئی اور اب یہ رقم 78 ارب روپے ہوگئی ہے۔

بجٹ میں ماس ٹرانزٹ اور ٹرانسپورٹ کیلئے 3 ارب 11 کروڑ روپے مختص کئے گئے ، ملیر ایکسپریس وے کیلئے 2 ارب 7 کروڑ روپے اور کراچی ٹھٹہ شاہراہ کیلئے ایک ارب 86 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں۔

وزیراعلی نے بتایا کہ صوبائی حکومت کے گریڈ ایک سے 16 تک کے ملازمین کی تنخواہیں 10 فیصد جبکہ گریڈ 17 سے 21 تک کے ملازمین کی تنخواہیں 5 فیصد بڑھائی جارہی ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو