ڈاکٹر ماہا کیس، 3 اہم افراد پر الزام

کراچی میں ڈاکٹر ماہا کے والد نے بیٹی کی خودکشی کے کیس میں 3 افراد کے خلاف مقدمہ درج کرانے کیلئے درخواست دے دی۔

ڈیفنس میں اپنے سر پر گولی مار کر خودکشی کرنے والی ڈاکٹر ماہا کے والد آصف علی شاہ نے گزری تھانے میں مقدمہ درج کرانے کیلئے درخواست دی ہے۔ انھوں نے الزام لگایا ہے کہ بیٹی کو اس کے دوست اور 2 ڈاکٹروں نے پریشان کرکے خودکشی پر مجبور کیا۔

ڈاکٹر ماہا کے والد نے بیٹی کو تشدد کا نشانہ بنا کر زخمی کرنے اور نشے کا عادی بنانے کے الزامات بھی عائد کئے ہیں۔

درخواست میں ڈاکٹر ماہا کے دوست جنید، کلفٹن کے معروف اسپتال کے ڈینٹسٹ عرفان قریشی اور ڈاکٹر وقاص کو نامزد کیا گیا ہے۔

والد نے درخواست میں اس چوتھے شخص کا بھی ذکر ہے جس نے پستول اپنے دوست سے لے کر ڈاکٹر ماہا کو دیا تھا، تابش اور سعد پہلے ہی گرفتار اور ریمانڈ پر ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو