مویشی منڈی آباد، کیٹ واک پر پابندی کیوں ؟

اعجاز امتیاز،اسرارخان، محمد رضوان

کورونا وبا کے باعث مویشی منڈیوں کیلئے اہم فیصلے کرلئے گئے ، نہ صرف بیوپاریوں بلکہ خریداروں کو بھی حفاظتی تدابیر پر عمل کرنا ہوگا۔

کراچی میں مویشی منڈی کی انتظامیہ نے ایس او پیز طے کرلئے ، 15 سے 50 سال کی عمر کے افراد ہی مویشی منڈی جانے کے اہل ہوں گے، بچوں ، خواتین اور بزرگوں کو جانور خریدنے کیلئے منڈی جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔

منڈی میں داخلے کیلئے 4 دروازے استعمال کئے جائیں گے جہاں سینیٹائزر دستیاب ہوں گے، داخلے کیلئے فیس ماسک اور دستانے پہننے ہوں گے ، مختلف مقامات پر نصب واش بیسن پر ہاتھ دھونے کی سہولت فراہم کی جائے گی، سماجی فاصلے کو یقینی بنایا جائے گا اور ایس او پیز کی خلاف ورزی پر جرمانہ کیا جائے گا۔

مویشی منڈی کے احاطے کو ہر روز 2 بار سینیٹائز کیا جائے گا جبکہ جانور کے بھگانے اور کیٹ واک پر پابندی ہوگی تاکہ کسی ایک مقام پر زیادہ رش نہ ہو۔

خیبرپختونخوا میں بھی تیاریاں کرلی گئی ہیں، محکمہ لائیو اسٹاک کے مطابق دیہی علاقوں میں 2 اور شہروں میں 4 مویشی منڈیاں لگانے کی اجازت ہوگی، ہر منڈی کا ایک داخلی اور ایک خارجی راستہ ہوگا جہاں صابن اور سینیٹائزر رکھے جائیں گے، فیس ماسک لگانا لازمی ہوگا اور سماجی فاصلہ یقینی بنایا جائے گا،  منڈی میں داخل ہونے والی گاڑیوں کو ڈس انفیکٹ کرنا ضروری ہوگا۔

پنجاب حکومت نے عید الاضحی پر شہروں سے باہر مویشی منڈیاں لگانے کا فیصلہ کیا ہے اور منڈیوں کے مقامات کا تعین ڈپٹی کمشنرز کریں گے۔

ٹرینڈنگ

مینو