کے الیکٹرک ٹیرف بڑھانے کا معاملہ موخر

محمد عثمان

وفاقی وزرا نے کے الیکٹرک کا ٹیرف بڑھانے کی مخالف کردی جس کے بعد وزیراعظم نے کے الیکٹرک کے معاملے پر جمعرات کو دوبارہ اجلاس بلالیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت کابینہ اجلاس میں کے الیکٹرک کے معاملے پر بھی غور کیا گیا اور رہنماوں نے کراچی میں غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ پر غم و غصے کا اظہار کیا۔ وفاقی وزیر اسد عمر اور امین الحق نے ٹیرف بڑھانے کی مخالفت کی، انھوں نے کہا کہ کراچی والوں کو پہلے ہی بجلی نہیں مل رہی ایسے میں قیمتیں بڑھانا مناسب نہیں ہوگا، وزیراعظم نے اس معاملے پر جمعرات کو دوبارہ غور کا فیصلہ کیا ہے۔ ای سی سی نے سہ ماہی ایڈجسٹمنت کی مد میں کے الیکٹرک صارفین کیلئے بجلی ایک روپے 9 پیسے سے بڑھا کر 2 روپے 89 پیسے یونٹ کرنے کی تجویز دی تھی۔

اسد عمر ، شیخ رشید اور فواد چوہدری نے درآمدی گیس کی مد میں 73 ارب روپے گھریلو اور کمرشل صارفین سے وصول کرنے کی مخالفت کی، یہ تجویز ای سی سی نے دی تھی۔

کابینہ کو عید الاضحیٰ کے موقع پر مویشی منڈیوں کے ایس او پیز سے متعلق آگاہ کیا گیا، وزیراعظم نے کہا کہ مویشی منڈیوں میں ایس او پیز پر ہر صورت عمل کرایا جائے۔

ٹرینڈنگ

مینو