علاج کرانا مشکل، ادویات مہنگی کرنے کی اجازت

غریب کیلئے علاج کرانا بھی مشکل  ہوگیا، حکومت نے فارما کمپنیوں کو دواؤں کی قیمتوں میں 7 سے 10 فیصد اضافے کی اجازت دے دی۔

وفاقی حکومت نے ادویات بنانے والی کمپنیوں کو کنزیومر پرائس انڈیکس (سی ہی آئی) کے تحت ادویات کی قیمتوں میں اضافے کی اجازت دے دی۔ ڈریپ کے نوٹی فکیشن میں بتایا گیا ہے کہ کمپنیوں اور امپورٹرز کو بنیادی دواؤں کی قیمتوں میں 7 فیصد جبکہ دیگر ادویات کی قیمتوں میں 10 فیصد اضافہ کی اجازت دی گئی ہے۔

نوٹی فکیشن میں بتایا گیا کہ ڈریپ نے وفاقی حکومت اور ڈریپ کے پالیسی بورڈ کی منظوری اور سفارش پر  ڈرگ پرائسنگ پالیسی 2018 میں ترمیم کی۔ وزارت قومی صحت ہر سال کنزیومر پرائس انڈیکس کے مطابق ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کرے گی۔

عوام نے ادویات کی قیمتوں میں اضافہ مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کورونا وبا کے باعث کاروبار متاثر ہوا اور آمدنی کم ہوچکی ہے، ایسے میں ادویات کی قیمتیں بڑھانے کا فیصلہ غریب کا گلا گھونٹنے کے مترادف ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو