معاشی ترقی 1فیصد رہنے کی پیش گوئی

انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ (آئی ایم ایف) نے کہا ہے کہ اگلے سال پاکستان کی معاشی ترقی ایک فیصد رہنے کا امکان ہے۔

آئی ایم ایف نے ورلڈ اکنامک آوٹ لک رپورٹ جاری کردی ، عالمی مالیاتی ادارے نے واضح کیا ہے کہ کورونا کے باعث عالمی اقتصادی بحران توقع سے زیادہ سنگین ہوگا، 30 جون 2020 کو ختم ہونے والے مالی سال میں پاکستان کی گروتھ منفی صفر اعشاریہ 4 فیصد رہے گی۔

اگرچہ حکومت نے نئے مالی سال کے بجٹ میں معاشی ترقی کا ہدف 2 اعشاریہ ایک فیصد رکھا ہے لیکن عالمی ادارے نے حکومتی اندازوں کو غلط قرار دیا اور کہا کہ شرح نمو ایک فیصد رہنے کا امکان ہے۔

رپورٹ میں پاکستان سمیت 30 اہم ملکوں کی اقتصادی کارکردگی کا تخمینہ پیش کیا گیا اور کورونا سے معاشی بحران سنگین ہونے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے، آئی ایم ایف نے تمام ممالک کو صحت کے شعبے میں زیادہ وسائل خرچ کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ نے اگلے سال بھی تیل کی عالمی قیمتیں کم رہنے کا امکان ظاہر کیا ہے جس سے پاکستان سمیت ترقی پذیر ممالک کو فائدہ ہوگا۔

ٹرینڈنگ

مینو