سلیمانی کا قتل،جاسوس کو پھانسی دینے کی تیاری

ایران نے مقتول جنرل قاسم سلیمانی سے متعلق اطلاعات امریکا اور اسرائیل کے انٹیلی جنس اداروں کو فراہم کرنے والے شہری کو جلد پھانسی دینے کا اعلان کردیا۔

امریکا نے عراق میں 3 جنوری کو ڈرون حملہ کرکے قدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی کو قتل کردیا تھا۔ واشنگٹن نے انھیں خطے میں امریکی فورسز پرحملوں کا ماسٹر مائنڈ قرار دیا تھا۔

ایرانی عدلیہ کے ترجمان غلام حسین اسماعیلی نے نیوزکانفرنس میں بتایا کہ محمد موسوی ماجد سی آئی اے اور موساد کیلئے کام کرنے والے افراد میں سے ایک ہے، اس نے دشمنوں کو اس مقام سے آگاہ کیا تھا جہاں جنرل سلیمانی عراق میں موجود تھے۔

ایرانی حکام نے یہ نہیں بتایا کہ موسوی ماجد ان 17 جاسوس افراد میں شامل ہے جنھیں گزشتہ عرصے میں سی آئی اے سے تعلق کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔

جنرل سلیمانی کی موت نے ایران اور امریکا کو جنگ کے دہانے پر پہنچا دیا تھا اور ایران نے اس عراقی ایئربس پر راکٹ حملہ کیا تھا جو امریکی فوجیوں کے زیراستعمال تھی۔

ٹرینڈنگ

مینو