کراچی: تاجروں کا دیر تک کاروبار کا اعلان

چھوٹے تاجر سندھ حکومت کے سامنے سینہ تان کر کھڑے ہوگئے ، کراچی میں افطار کے بعد بھی تجارتی مراکز اور شاپنگ مال کھولنے کا اعلان کردیا گیا۔

کمشنر کراچی کے آفس میں صوبائی وزیر سعید غنی ، امتیاز شاہ اور کمشنر افتخار شالوانی نے تاجر اتحاد کے وفد سے مذاکرات کئے۔ تاجروں کا موقف تھا کہ شاپنگ مالز کھلنے اور کاروبار دیر تک کرنے سے سماجی دوری ممکن ہوجائے گی۔

حکومتی شخصیات نے واضح کردیا کہ بڑے شاپنگ مالز کھولنے اور 24 گھنٹے کاروبار کی اجازت نہیں دی جاسکتی، اس معاملے پر وزیراعلی سے بات کی جائے گی، حکومتی ٹیم نے سیل کی گئی مارکیٹس کھولنے کا مطالبہ مان لیا۔

کراچی تاجر اتحاد کے سربراہ عتیق میر نے مذاکرات کے بعد صحافیوں سے گفتگو میں تمام کاروبار کھولنے کا اعلان کردیا، انھوں نے بتایا کہ تاجر جیلیں بھرنے کو تیار ہیں لیکن مارکیٹس ضروری کھلیں گی۔

سعید غنی نے وارننگ دی ہے کہ احکامات پر عمل نہ کیا گیا تو کارروائی ہوگی اور دکانیں سیل کردی جائیں گی۔ انھوں نے تحریک انصاف پر تاجروں کو اکسانے کا الزام لگایا اور کہا کہ پی ٹی آئی  ابتدا سے حکومتی فیصلوں کو سبوتاژ کر رہی ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو