ٹیم کی خراب کارکردگی، مصباح الحق کے بہانے

ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مصباح الحق نے اپنی ناکامیوں کا جواز ماضی کی خراب کارکردگی میں تلاش کرنے لگے، انھوں نے یہ دعوی بھی کیا ہے کہ سرفراز احمد نے انگلینڈ کے خلاف آخری ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلنے سے انکار نہیں کیا تھا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کی آڈیو کلپ میں مصباح الحق نے بتایا کہ کوئی بھی کھلاڑی سیریز  کے آخر میں میچ کھیلے تو اس پر اضافی دباو ہوتا ہے۔

ہیڈکوچ نے بتایا کہ بابر اعظم ، یونس خان اور انھوں نے سرفراز سے بات کی، سابق کپتان سے کہا گیا کہ بے فکر ہو کر کھیلیں، اس بات کی پروا نہ کریں کہ پرفارمنس میں کمی بیشی کا مستقبل پر اثر پڑے گا، اس کے بعد وکٹ کیپر بیٹسمین مطمئن ہوگئے۔

لاہور میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے مصباح نے قومی ٹی ٹوئنٹی ٹیم کی پہلی سے چوتھی پوزیشن پر جانے کا جواز پیش کرتے ہوئے کہا کہ جب انھوں نے چارج لیا تو شکستوں کا سفر شروع ہوچکا تھا، اہم کھلاڑی فخرزمان ، شاداب خان اور حسن علی آؤٹ آف فارم ہوچکے تھے۔

مصباح نے ٹیم کی جنوبی افریقا کے خلاف سیریز اور انگلینڈ میں ون ڈے میچ میں شکست کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ ٹیم اب بہتر ہورہی ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو