کراچی: دہشتگرد کا سرغنہ سے رابطہ تھا، حکام

اعجاز امتیاز، محسن رضا

زبرنیوز کی ایک اور تحقیقاتی خبر درست ثابت ہوگئی، پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر حملے میں ملوث دہشت گرد کے ماسٹر مائنڈ سے رابطے کی تصدیق کردی گئی۔

29 جولائی کو پاکستان اسٹاک ایکسچنج پر حملے کے بعد زبرنیوز نے نشاندہی کی تھی کہ دہشت گرد ٹیلی فون پر رابطے میں تھا، اب تفتیشی حکام نے زبرنیوز کو بتایا کہ وہ رپورٹ درست تھی۔

کراچی: پاکستان اسٹاک ایکسچینج حملہ کی سی سی ٹی وی فوٹیج.

Posted by Zabar News on Monday, June 29, 2020

اس سی سی ٹی وی فوٹیج میں 5 منٹ 10 سیکنڈ پر دہشت گرد کو بڑبڑاتے اور منہ پر انگلی رکھتے دیکھا جاسکتا ہے، کچھ دیر بعد وہ انگلی سے اشارہ کرتا بھی نظر آتا ہے۔

حکام کے مطابق دہشت گرد موبائل فون کے ذریعے ماسٹر مائنڈ سے رابطے میں تھا اور اہم معلومات حاصل کرلی گئی ہیں۔

ذرائع نے بتایا کہ اس حملے کا ماسٹر مائنڈ کالعدم تنظیم کا کمانڈر بشیر زیب تھا اور اسے اسلم اچھو کے بعد کمانڈر بنایا گیا تھا۔

اسٹاک ایکسچینج حملے میں ملوث دہشت گرد بلوچستان کے رہائشی تھے اور انھوں نے سبزی منڈی پر واقع شوروم سے گاڑی خریدی تھی جو حملے میں استعمال کی گئی۔ اس حملے میں پولیس اہلکار اور 3 سیکیورٹی گارڈ شہید ہوئے تھے جبکہ فورسز نے چند منٹ میں ہی چاروں دہشت گردوں کو ہلاک کردیا تھا۔

ٹرینڈنگ

مینو