مشتبہ لائسنس: 150 پائلٹس گراونڈ

اعجاز امتیاز

قومی ایئرلائن نے مشتبہ لائسنس رکھنے والے پائلٹس کے خلاف بڑی کارروائی شروع کردی اور 150 پائلٹس کو گراونڈ کردیا ہے۔

پی آئی اے ترجمان عبداللہ حفیظ کے مطابق 150 پائلٹس کے لائسنس مشکوک ہیں، انتظامیہ نے سول ایوی ایشن اتھارٹی سے تحریری درخواست کی ہے کہ دیگر مشتبہ لائسنس والے پائلٹس کی فہرست بھی فراہم کی جائے، جو پائلٹس اپنے لائسنس کی تصدیق کرائیں گے انھیں ہی ڈیوٹی پر لیا جائے گا۔

اس سوال پر کہ کیا پائلٹس کو گراونڈ کرنے سے فلائٹ آپریشن متاثر نہیں ہوگا ؟ ترجمان نے بتایا کہ فلائٹ سیفٹی اور مسافروں کا تحفظ سب سے زیادہ اہم ہے۔ اس معاملے پر سمجھوتہ نہیں ہوسکتا اور جعلی ڈگری والے 6 پائلٹس کو نوکری سے نکالا جاچکا ہے۔

وزیر ہوا بازی غلام سرور خان نے سانحہ 22 مئی کی عبوری تحقیقاتی رپورٹ بدھ کو قومی اسمبلی میں پیش کی تھی ، انھوں نے بتایا تھا کہ پی آئی اے میں پائلٹس کی بڑی تعداد کے پاس مشتبہ لائسنس ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو