وزیراعظم نے استعفی نہیں مانگا، غلام سرور

وفاقی وزیرشہری ہوا بازی غلام سرور خان نے کہا ہے کہ پی آئی اے طیارہ حادثے کی ابتدائی رپورٹ 22 جون کو پبلک کردی جائے گی۔ مکمل رپورٹ آنے میں 6 ماہ لگ سکتے ہیں۔

لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران غلام سرور خان نے بتایا کہ نہ ان سے وزیراعظم نے استعفی مانگا نہ انھوں نے پیشکش کی ، عوام بھی ایسا نہیں چاہتے تھے، انکوائری رپورٹ میں پتہ چلے گا غلطی کس کی تھی۔ کوشش ہے انکوائری جلد مکمل ہوجائے۔

وفاقی وزیر نے بتایا کہ وزیراعظم نے ہدایت کی تھی کہ تمام شہدا کے ورثا سے ملاقات کی جائے اور رقم جلد از جلد ادا کی جائے۔ ہر شہید کے ورثا کو 10 ، 10 لاکھ روپے دے دیئے گئے ہیں البتہ 2 یا 3 فیملیز کو رقم فراہم کی جانی ہے۔ 3 میتوں کی شناخت نہیں ہوسکی۔

غلام سرور خان نے کہا کہ طیارہ گھروں پر گرنے سے 3 بچیاں جھلس گئی تھیں، ان میں سے ایک جاں بحق ہوئی، اس کے ورثا کو 10 لاکھ اور زخمیوں کو 5 ، 5 لاکھ روپے دیئے جاچکے ہیں۔ جو مکان متاثر ہوئے اور گاڑیاں تباہ ہوئیں ان کے مالکان کو بھی معاوضہ دیا جائے گا، اس سلسلے میں نقصانات کا تخمینہ لگایا جارہا ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو