چاہتے ہیں کورونا کا پھیلاؤ آہستہ آہستہ ہو

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ لاک ڈاؤن سے کورونا وائرس ختم نہیں ہوتا، صرف پھیلاؤ میں کمی ہوتی ہے، لاک ڈاؤن کی وجہ سے لوگ مشکل میں تھے، تمام ممالک نے پابندیاں ختم کردی ہیں۔  

کورونا وائرس کی صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ عوام نے احتیاط نہ کی تو لوگوں کی زندگیاں خطرے میں ہوں گی، صرف ماسک پہننے سے وبا کا پھیلاؤ 50 فیصد کم ہوجاتا ہے۔

عمران خان نے بتایا کہ ملک میں جولائی یا اگست میں کورونا کیسز عروج پر ہوں گی، احتیاط کرکے تباہی سے بچاجاسکتا ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ چاہتے ہیں کورونا کی شرح تیزی سے نہ بڑھے، آہستہ آہستہ بڑھے تاکہ اسپتالوں پر دباو نہ ہو، انھوں نے بتایا کہ اسی ماہ اسپتالوں کیلئے آکسیجن والے ایک ہزار بیڈز کا اضافہ کردیا جائے گا۔

لاک ڈاؤن کی مخالفت کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ لاک ڈاؤن کا مطلب یہ نہیں ہوتا کہ کورونا ختم ہوجائے گا، اس سے وبا کا پھیلاؤ کم ہوجاتا ہے، لاک ڈاؤن کی وجہ سے غریب افراد کو مشکل وقت سے گزرنا پڑا۔

ٹرینڈنگ

مینو