پروفیسر عنایت علیخان کے وزیراعظم کیلئے اشعار

طنز و مزاح سے بھرپور شاعری کرنے والے پروفیسر عنایت علی خان 85 برس کی عمر میں انتقال کر گئے۔

پروفیسر عنایت علی خان امراض قلب میں مبتلا تھے، انھیں دل کا دورہ پڑنے کے بعد کراچی کے نجی اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔

پروفیسر عنایت علی خان کے شعری مجموعوں میں ازراہ عنایت، عنایتیں کیا کیا اور کلیات عنایت شامل ہیں۔ مرحوم کی نماز جنازہ کراچی کی ماڈل کالونی میں ادا کی گئی اور تدفین علاقے کے قبرستان میں ہوئی۔۔

مزاحیہ شاعری پروفیسر عنایت علی خان کی شناخت بنی اور لوگ ان کے کلام پر لوٹ پوٹ ہوجاتے تھے۔ انھوں نے وزیراعظم عمران خان سے متعلق بھی شعر کہے تھے آئیں وہ سنتے ہیں۔

وہ 1935 میں بھارتی ریاست راجستھان سے ہجرت کرکے حیدرآباد آئے اور سندھ یونیورسٹی سے ماسٹرز کی ڈگری حاصل کی، پروفیسر عنایت علی خان تدریس کے شعبے سے وابستہ ہوئے اور کئی برس تک سندھ ٹیکسٹ بک بورڈ سے بھی منسلک رہے۔

ٹرینڈنگ

مینو