نجی اسکول 15 اگست سے کھولنے کا اعلان

نجی اسکولوں نے 15 اگست سے تدریس کا سلسلہ شروع کرنے کا اعلان کردیا۔

آل پاکستان پرائیویٹ اسکولز فیڈریشن اور کراچی پرائیویٹ اسکولز ایکشن کمیٹی کے رہنماؤں نے پریس کانفرنس کے دوران بتایا کہ درسگاہیں کھولنے کیلئے 31 نکاتی ضابطہ کار طے کئے گئے ہیں۔

ایکشن کمیٹی کے رہنما پرویز ہارون نے کہا کہ وفاق اور صوبے نے نجی اسکولوں کی انتطامیہ کو نظر انداز کردیا، کئی اسکول  مالکان محنت مزدوری پر مجبور ہوگئے، انھوں نے دعویٰ کیا کہ 74 فیصد والدین بچوں کو اسکول بھیجنا چاہتے ہیں۔ پرویز ہارون نے کہا کہ جن علاقوں میں صورتحال بہتر نہیں وہاں اسکولز نہیں کھولے جائیں گے۔

آل پاکستان پرائیویٹ اسکولز فیڈریشن کے صدر کاشف مرزا نے کہا کہ آن لائن تعلیم کا منصوبہ فلاپ ہوگیا، حکومت 15 اگست سے اسکول کھولنے کا اعلان کرے ورنہ نجی ادارے خود اسکول کھول دیں گے۔ اگر رکاوٹ ڈالی گئی تو لانگ مارچ کیا جائے گا۔

انھوں نے واضح کیا کہ تعلیمی اداروں کو قانونی تحفظ دینے کیلئے قانونی ماہرین کی خدمات حاصل کرلی گئی ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو