پارہ چنار : بم دھماکا، 20 افراد زخمی

شہباز بنگش

دہشت گردوں نے ایک بار پھر پارا چنار کو نشانہ بنایا ہے اور طوری مارکیٹ میں بم دھماکے سے 20 افراد زخمی ہوگئے ہیں، اسپتال منتقل کئے گئے 16 افراد میں سے کئی کی حالت تشویشناک ہے۔ 

ڈی ایس پی نجیب علی کے مطابق دھماکا امپرووائزڈ ایکسپلوزو ڈیوائس (آئی ای ڈی) کے ذریعے کیا گیا اور دھماکا خیز مواد سبزی کی ٹوکری میں چھپایا گیا تھا۔

مارکیٹ میں دھماکا اس وقت کیا گیا جب لوگوں کا ہجوم تھا اور شہری خریداری میں مصروف تھے، زخمیوں میں بیشتر افراد سبزی اور پھل فروش تھے جنھیں ڈی ایچ کیو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر اسپتال کے ڈپٹی میڈیکل سپرنٹنڈنٹ نے اسپتال میں 16 زخمیوں کے لائے جانے کی تصدیق کردی ہے۔

سیکیورٹی اہلکاروں کی بڑی تعداد پارا چنار میں تعینات ہے۔ گزشتہ 3 ماہ کے دوران علاقے میں یہ دوسرا بم دھماکا ہے، ایک ماہ پہلے اسی علاقے میں 2 قبائل کے درمیان جھڑپ بھی ہوئی تھی۔

چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے بم دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے دہشت گردی کے بڑھتے ہوئے واقعات پر تشویش کا اظہار کیا ہے، انھوں نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان پر عمل نہ کرنے سے دہشت گردوں کی حوصلہ افزائی ہوئی ہے۔ 

بلاول بھٹو نے دہشت گردی کے منصوبہ سازوں کو قانون کی گرفت میں لانے کا مطالبہ کیا اور پارٹی عہدیداروں کو متاثرہ خاندانوں کی مدد کی ہدایت کی۔

ٹرینڈنگ

مینو