سندھ: پبلک ٹرانسپورٹ چلانے کی اجازت

کراچی سمیت سندھ بھر میں شہروں کے اندر پبلک ٹرانسپورٹ اور آن لائن ٹیکسی چلانے کی اجازت دے دی گئی۔

وزیر ٹرانسپورٹ اویس شاہ اور ٹرانسپورٹرز کے مذاکرات کامیاب ہوگئے، حکومت نے شہروں کے اندر چلنے والی ٹرانسپورٹ کھولنے کی اجازت دے دی، حکومت نے ایس او پیز پر عملدرآمد کی مانیٹرنگ کا فیصلہ کیا ہے اور انسپیکشن ٹیم بنادی گئی ہے۔

وزیرٹرانسپورٹ اویس شاہ نے بتایا کہ گاڑیوں میں ماسک اور سینیٹائزر رکھنا لازمی ہوگا، گاڑیوں میں اضافی مسافر نہیں بٹھائے جائیں گے ، ٹرانسپورٹرز نے ایس او پیز پر عمل نہ کیا تو گاڑیاں بند کردی جائیں گی۔ فی الحال ایک شہر سے دوسرے شہر چلنے والی ٹرانسپورٹ بند رہے گی۔ آن لائن ٹیکسی سروس بھی بحال کردی گئی ہے البتہ ٹیکسی میں صرف 2 افراد کو بیٹھنے کی اجازت ہوگی، تیسرا شخص صرف ایمرجنسی کی صورت میں بٹھایا جائے گا۔

سندھ میں پبلک ٹرانسپورٹ تقریبا سوا 2 ماہ بند رہی البتہ کچھ روٹس پر چنگچی رکشے چلائے جارہے تھے۔

ٹرینڈنگ

مینو