بچی سے زیادتی اور قتل،ملزم کا اعتراف جرم

چارسدہ میں ننھی زینب کے اغوا ، جنسی زیادتی اور قتل کیس کے ملزم نے اعتراف جرم کرلیا۔

پولیس ذرائع کے مطابق کیس میں تقریبا 3 سو افراد سے پوچھ گچھ کی گئی، 15 مشتبہ افراد کو حراست مین لیا گیا ، ان میں سے 40 تا 45 برس کے شخص نے اعتراف جرم کرلیا۔ ملزم بچی کا محلے دار ہے ، اس سے زیادتی کے مقام کی نشاندہی کرائی گئی جبکہ آلہ قتل درانتی اور کھیتوں سے بچی کے جوتے بھی برآمد کرلئے گئے ہیں۔

چارسدہ کے گاوں شیخ کلی میں ڈھائی برس کی بچی 6 اکتوبر کو اغوا کی گئی تھی، درندہ صف شخص نے مبینہ زیادتی کے بعد بچی کا پیٹ اور سینہ چھری سے کاٹ کر اسے قتل کردیا تھا، کم سن کی لاش اگلے روز کھیتوں سے ملی تھی۔

بچی کے والد نے ملزم کو چوک پر لٹکانے کا مطالبہ کیا ہے، پولیس کا کہنا ہے کہ ابھی زینب کی ڈی این اے رپورٹ موصول نہیں ہوئی ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو