مائنس ون ہوا تو سسٹم لپیٹا جائے گا، شیخ رشید

کورونا وائرس کو شکست دینے والے وزیرریلوے شیخ رشید نے ملک میں طبی سہولتوں سے متعلق حقیقت بتادی ، وزیرریلوے کہتے ہیں انھوں نے 14 وزارتیں چلائیں لیکن علاج کیلئے ایک ٹیکا 5 لاکھ کا بھی نہیں مل رہا تھا۔ اگر مائنس کی بات آئی تو سسٹم لپیٹا جائے گا۔

لاہور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے شیخ رشید نے کورونا وائرس سے متعلق بھی گفتگو کی، انھوں نے بتایا کہ ان پر 4 خودکش حملے ہوئے لیکن وہ نہیں گھبرائے ، کورونا انتہائی خطرناک بیماری ہے، انھیں ایک ٹیکا نہیں مل رہا تھا اور این ڈی ایم اے کے جنرل افضل نے انتطام کرکے دیا۔ اللہ یہ بیماری کسی دشمن کو بھی نہ لگائے، خدا شہباز شریف کو بھی صحت یاب کرے۔

سیاسی صورتحال پر بات کرتے ہوئے شیخ رشید نے بتایا کہ عمران خان بہت محنت کر رہے ہیں، وہ حکومت چلاتے کی کوشش کر رہے ہیں ، ہم آخری چوائس نہیں، اگر مائنس کی بات آئی تو مائنس تھری ہوگا اور سسٹم لپیٹا جائے گا۔

انھوں نے پی ٹی آئی رہنماؤں سے اپنے گندے کپڑے ٹی وی پر نہ دھونے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن وہ کام نہیں کررہی جو بعض وزرا حکومت کے خلاف خود کررہے ہیں، کرپٹ اپوزیشن کچھ نہیں بگاڑ سکتی، اب گیند ہمارے پاس ہے اور ہم نے ڈلیور کرنا ہے ۔

بلاول بھٹو کے بیان سے متعلق وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ آصف زرداری کو عدالت بلا کر کیوں مارا جائے گا، انھوں نے ساری قوم کو لوٹ کر مار ڈالا۔

شیخ رشید نے کسی کا نام لئے بغیر تنقید کی اور کہا کہ پیٹرول کی قیمت بے وقت کم کی گئی اور بجٹ منظوری سے پہلے سازش کے تحت 25 روپے بڑھادی گئی تاکہ بجٹ کی منظوری میں مسائل پیدا ہوں ، یہ سارے سازشی لوگ ہیں۔

ٹرینڈنگ

مینو