نیویارک ٹائمز کی خبر غلط، وائٹ ہاؤس

وائٹ ہاوس نے افغانستان میں امریکی فوجیوں کو ہلاک کرنے کیلئے روسی فوج کی جانب سے طالبان کو مراعات دیئے جانے کے بارے میں امریکی اخبار کی رپورٹ مسترد کردی ہے، وائٹ ہاوس نے واضح کہا ہے کہ اس بارے میں صدر ٹرمپ اور ان کے نائب مائیک پنس کو بریفنگ دیئے جانے کی اطلاعات بے بنیاد ہیں۔

وائٹ ہاوس کی ترجمان کیلی میکینینی نے کہا کہ وہ مبینہ انٹیلی جنس معاملے کی صداقت پر تو بات نہیں کررہیں البتہ نیویارک ٹائمز کی وہ خبر غلط ہونے سے متعلق آگاہ کررہی ہیں جس میں کہا گیا ہے کہ صدر ٹرمپ کو اس معاملے پر بریفنگ دی گئی تھی۔

امریکی اخبار نے انٹیلی جنس ذرائع کی بنیاد پر الزام لگایا تھا کہ روسی فوج نے طالبان جنگجووں کو افغانستان میں اتحادی فوجی ہلاک کرنے کیلئے رقوم دی تھیں تاہم یہ نہیں بتایا تھا کہ رقوم لے کر کتنے امریکی یا اتحادی فوجیوں کو ہلاک کیا گیا تھا۔

اخباری خبر پر ردعمل میں ڈیموکریٹ صدارتی امیدوار جو بائیڈن نے صدر ٹرمپ پر کڑی تنقید کی تھی۔ بائیڈن کا کہنا تھا کہ ٹرمپ درحقیقت پوٹن کیلئے تحفہ ثابت ہوئے ہیں اور امریکا کو نیچا دکھا رہے ہیں۔

روس نے امریکی اخبار کی رپورٹ کو ردی کی ٹوکری میں پھینکنے کے قابل قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ یہ رپورٹ امریکی خفیہ اداروں سے وابستہ افراد کی کم تر ذہنی صلاحیتوں کی عکاس ہے۔

ٹرینڈنگ

مینو